سارا ملک جھوٹ پر چل رہا ہے، سکیورٹی تھریٹ کا کہا جا رہا ہے یہ بھی جھوٹ ہے، عمران خان

سارا ملک جھوٹ پر چل رہا ہے، سکیورٹی تھریٹ کا کہا جا رہا ہے یہ بھی جھوٹ ہے، عمران خان

راولپنڈی ( ۔ 13 مارچ 2024ء ) پاکستان تحریک انصاف کے قائد عمران خان نے کہا ہے کہ سب کچھ جھوٹ پر چل رہا ہے، الیکشن جھوٹے ہوئے، اداروں کی ساکھ ختم کر دی گئی، اب سکیورٹی تھریٹ کا کہا جا رہا ہے یہ بھی جھوٹ ہے، سارا ملک جھوٹ پر چل رہا ہے۔ اڈیالہ جیل میں میڈیا نمائندوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم انتخابات میں دھاندلی کے خلاف سپریم کورٹ بھی جائیں گے، سینٹ الیکشن میں پھر پیسہ چلنے والا ہے، گزشتہ سینیٹ انتخابات میں گیلانی کا بیٹا پکڑا گیا لیکن آج تک سزا نہیں ہوئی، ووٹر نے پولنگ ڈے پر ان سے بدلہ لیا لیکن ووٹ کے ذریعے تبدیلی کو تسلیم نہیں کیا گیا، انہوں نے مینڈیٹ چھین کر قوم کی امید ختم کردی، اب مہنگائی میں اضافہ ہو گا،عوام باہر نکل آئے گی،ہمارا پرامن احتجاج کا سلسہ جاری رہے گا۔
بتایا جارہا ہے کہ 190 ملین پاؤنڈ نیب ریفرنس میں اڈیالہ جیل حکام نے صرف 6 وکلاء اور 6 صحافیوں کو سماعت میں جانے کی اجازت دی جب کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے پاکستان تحریک انصاف کے قائد عمران خان سے ملاقات نہ کرانے پر سپرنٹنڈنٹ اڈیالہ جیل کو توہین عدالت کی درخواست پر نوٹس جاری کر دیا، اسلام آباد ہائیکورٹ میں عدالتی احکامات کے باوجود عمران خان سے ملاقات نہ کرانے پر علامہ ناصر عباس کی درخواست پر جسٹس ثمن رفعت امتیاز نے سماعت کی، دوران سماعت وکیل درخواست گزار نے بتایا کہ ’اسلام آباد ہائیکورٹ نے 8 مارچ 2024 ءکو عمران خان سے ملاقات کرانے کے احکامات جاری کیے،سپرنٹنڈنٹ اڈیالہ جیل نے جان بوجھ کر حکم عدولی کرتے ہوئے ملاقات نہ کرائی، اس بنیاد پر سپرنٹنڈنٹ اڈیالہ جیل کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے اور عمران خان سے اہل خانہ اور وکلا کی ملاقات کرائی جائے‘، بعد ازاں عدالت نے درخواست گزار کے وکیل کے دلائل سننے کے بعد سپرنٹنڈنٹ اڈیالہ جیل کو 15 مارچ کیلئے نوٹس جاری کردیا۔

Leave a Comment